میں نے دیکھا ھے

میں نے دیکھا ھے توڑ کر خود کو
اپنے اندر بھی میں نہیں رہتا

تبصرے کیجئے

Click here to post a comment

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.