یہ اداسیاں تو میرے عہد کی

یہ اداسیاں تو میرے عہد کی علامت ہیں

میں ہنس پڑا تو بہت پیچھے لوٹ جاوں گا

تبصرے کیجئے

Click here to post a comment

Leave a Reply

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.